یمن میں اقوام متحدہ کا سکیورٹی عملہ 18 ماہ کی قید کے بعد رہا

صنعا: یمن میں اقوام متحدہ کے سکیورٹی عملے کو 18 ماہ کی قید کے بعد رہا کر دیا گیا جس کا اقوام متحدہ نے خیر مقدم کیا ہے۔اس حوالے سے اقوام متحدہ کے نائب ترجمان فرحان حق کا کہنا ہے کہ سیکرٹری جنرل انتونیو گوترس نے بھی رہائی کا خیرمقدم کیا اور اس بات کا اعادہ کیا کہ اغوا ایک غیر انسانی اور ناقابل جواز جرم ہے جو قابل مذمت ہے۔
انہوں نے بتایا کہ سیکرٹری جنرل نے مجرموں سے جواب دہی کا مطالبہ بھی کیا، رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ نے تاحال یہ نہیں بتایا کہ سکیورٹی اہلکاروں کو کس نے اغوا کیا تھا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں