شرپسند عناصر کو کچے کے علاقے میں دوبارہ پنپنے نہیں دینگے: محسن نقوی

لاہور: نگران وزیراعلیٰ پنجاب محسن نقوی نے کہا ہے کہ شرپسند عناصر کو کچے کے علاقے میں دوبارہ پنپنے نہیں دیں گے۔نگران وزیراعلیٰ پنجاب نے رحیم یار خان کے علاقے کچہ کا دورہ کیا، محسن نقوی نے کچے کے علاقے میں ڈاکوؤں کے خلاف آپریشن میں حصہ لینے والے پولیس افسروں اور جوانوں سے ملاقات کی اور پولیس جوانوں کے جذبے کو سراہا۔اس موقع پر وزیراعلیٰ محسن نقوی، آئی جی ڈاکٹر عثمان انور، ایڈیشنل آئی جی ساؤتھ پنجاب اور دیگر پولیس افسران نے جوانوں کے ساتھ مل کر کھانا کھایا۔محسن نقوی نے کچے کے علاقے میں قائم پولیس چوکی، ڈسپنسری اور سکول کا بھی دورہ کیا اور شرپسندوں کے خلاف جاری آپریشن میں پیشرفت کا جائزہ لیا۔
اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے نگران وزیراعلیٰ کا کہنا تھا کہ شدید گرمی و حبس میں آپریشن میں حصہ لینے والے پولیس افسروں اور جوانوں کی حوصلہ افزائی کیلئے کچے کے علاقے میں آیا ہوں، کچے کے علاقے میں آپریشن کامیابی سے جاری ہے اور پولیس نے بیشتر ایریا شرپسندوں سے خالی کرا لیا ہے، قوم کو پنجاب پولیس کے بہادر سپوتوں پر ناز ہے جنہوں نے ہر موقع پر جرأت کے ساتھ فرائض ادا کئے۔
محسن نقوی نے کہا کہ آپریشن میں حصہ لینے والے پولیس افسروں اور جوانوں کی بہادری اور جذبے کو سلام پیش کرتے ہیں، کچے کے علاقے میں پائیدار امن کا قیام پہلی ترجیح ہے، علاقے میں ترقی اور خوشحالی امن سے منسلک ہے، شرپسندوں کے ٹھکانے ختم کر کے مستقل انفراسٹرکچر قائم کیا جا رہا ہے، شرپسند عناصر کو کچے کے علاقے میں دوبارہ پنپنے نہیں دیں گے۔آئی جی پنجاب ڈاکٹر عثمان انور نے نگران وزیراعلیٰ محسن نقوی کو شرپسندوں کے خلاف جاری آپریشن میں کامیابیوں کے بارے میں بریفنگ دی۔محسن نقوی نے جنوبی پنجاب میں کپاس کے زیر کاشت رقبے کا بھی معائنہ کیا، انہوں نے زیر کاشت رقبے میں اضافے پر اطمینان کا اظہار کیا۔
وزیراعلیٰ پنجاب کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ محکمہ زراعت، انتظامیہ اور فیلڈ سٹاف کو شاباش دیتے ہیں، کپاس کی کاشت سے 3 ارب ڈالر تک کا زرمبادلہ حاصل ہو گا، ملکی تاریخ میں بڑے پیمانے پر صوبہ پنجاب میں کپاس کاشت کی گئی ہے، جنوبی پنجاب انتظامیہ نے کپاس کی کاشت کے حصول کے لئے انتھک محنت کی ہے۔ایڈیشنل چیف سیکرٹری جنوبی پنجاب بریفنگ میں وزیراعلیٰ پنجاب کو بتایا کہ صوبہ میں 50 لاکھ ایکڑ رقبے پر کپاس کی کاشت کا ٹارگٹ مقرر کیا گیا، 96 فیصد ہدف حاصل کر لیا ہے، جنوبی پنجاب میں مجموعی طور پر 43 لاکھ 45 ہزار ایکڑ رقبہ پر کپاس کی کاشت کی گئی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں